Results 1 to 2 of 2

Thread: اک پل میں اک صدی کا مزا ہم سے پوچھیئے

  1. #1
    asiminf's Avatar
    asiminf is offline Ambarsariya
    Join Date
    May 2009
    Location
    LAHORE
    Posts
    5,315
    Thanks
    43,758
    Thanked 16,074 Times in 4,439 Posts
    Time Online
    3 Weeks 11 Hours 18 Minutes 43 Seconds
    Avg. Time Online
    16 Minutes 49 Seconds
    Rep Power
    2638

    Default اک پل میں اک صدی کا مزا ہم سے پوچھیئے





    اک پل میں اک صدی کا مزا ہم سے پوچھیئے

    دو دن کی زندگی کا مزا ہم سے پوچھیئے
    بھولے ہیں رفتہ رفتہ انہیں مدّتوں میں ہم
    قسطوں میں خود کشی کا مزا ہم سے پوچھیئے
    آغازِعاشقی کا مزا آپ جانیے
    انجامِ عاشقی کا مزا ہم سے پوچھیئے
    وہ جان ہی گئے کہ ہمیں ان سے پیار ہے
    آنکھوں کی مخبری کا مزا ہم سے پوچھیئے
    جلتے دلوں میں جلتے گھروں جیسی ضَو کہاں
    سرکار روشنی کا مزا ہم سے پوچھیئے
    ہنسنے کا شوق ہم کو بھی تھا آپ کی طرح
    ہنسیے مگر ہنسی کا مزا ہم سے پوچھیئے
    ہم توبہ کر کے مر گئے قبلِ اجل خمارؔ
    توہینِ مے کشی کا مزا ہم سے پوچھیئے



  2. The Following 4 Users Say Thank You to asiminf For This Useful Post:

    Danish ch (04-01-2017), just_visitor (08-01-2017), Sexeria (08-01-2017), youngheart (04-01-2017)

  3. #2
    Sexeria's Avatar
    Sexeria is offline VVIP
    Join Date
    Oct 2016
    Location
    Lahore
    Age
    25
    Posts
    235
    Thanks
    315
    Thanked 1,021 Times in 218 Posts
    Time Online
    1 Day 13 Hours 34 Minutes 45 Seconds
    Avg. Time Online
    25 Minutes 41 Seconds
    Rep Power
    486

    Arrow

    واہ عاصم بھائی عشق کی حدت محسوس ہو رہی ہے اس شعر غزل سے

    آپ کے تھریڈ اور عشق کے نام ایک چھوٹی سی کاوش


    عشق مجبور و نمرود سہی
    پھر بھی ظالم کا بول بالا ہے

  4. The Following 2 Users Say Thank You to Sexeria For This Useful Post:

    asiminf (09-01-2017), youngheart (16-01-2017)

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •